Breaking News

6/recent/ticker-posts

Header Ads Widget

Tujhe Kho Kar Paya Romantic Novel By Abida Z Shiren

Tujhe Kho Kar Paya Romantic Novel By Abida Z Shiren

Tujhe Kho Kar Paya Romantic Novel By Abida Z Shiren

Novel Name : Tujhe Kho Kar Paya
Writer Name: Abida Z Shiren)
Category : ROMANTIC NOVELS

مگر شاہ زین بھی اس کی طرح اکڑو مشہور تھا وہ دعا کی طرف توجہ نہ دیتا. بلکہ وہ سامنے آتی تو اس کی طرف دیکھ کر ماں سے کہتا اماں میری منگنی کسی خوبصورت سی لڑکی سے کرتی کیا دیکھا ہے اس بدشکل دعا میں. نہ کشش نہ حسن.

ماں ڈانٹ کر کہتی خبردار جو میری بیٹی کو بدشکل کہا تو چاند کا ٹکڑا ہے میری بچی.

وہ ہنس کر طنزیہ اس کی طرف دیکھ کر کہتا اچھا مجھے تو یہ چاند کہیں سے نظر نہیں آ رہی ہے. اچھا چاند کے اندر جو بدنما داغ ہیں اس سے تشبیہ دے رہی ہیں. وہ سر پکڑ کر کہتا پتا نہیں میری لاہف کیسے ایک بدشکل چڑیل کے ساتھ گزرے گی. کاش کوئی مجھے اس چڑیل سے بچا لے.

دعا دل میں دکھ لیے اٹھ کر کہتی اپنی شکل دیکھی ہے کھبی. کوئی لڑکی تم سے شادی پر تیار نہ ہو. تمھارے ساتھ تو سامنے جاتی جوان ملازمہ شمیم سے چلا کر بولی ادھر آ شمو بتا کیا کوئی لڑکی اس بندے سے شادی پر راضی ہو سکتی ہے.

شمو پریشان ہو کر بولی جی ججی. وہ ہکلاتے ہوئے بولی. جی ہو سکتی ہے.

Kitab Nagri start a journey for all social media writers to publish their writes.Welcome To All Writers,Test your writing abilities.
They write romantic novels,forced marriage,hero police officer based urdu novel,very romantic urdu novels,full romantic urdu novel,urdu novels,best romantic urdu novels,full hot romantic urdu novels,famous urdu novel,romantic urdu novels list,romantic urdu novels of all times,best urdu romantic novels.
Tujhe Kho Kar Paya Romantic Novel By Abida Z Shiren is available here to download in pdf form and online reading.
Click on the link given below to Free download Pdf
Free Download Link
Click on download
give your feedback

ناول پڑھنے کے لیے نیچے دیئے گئے ڈاؤن لوڈ کے بٹن پرکلک کریں
 اورناول کا پی ڈی ایف ڈاؤن لوڈ کریں  👇👇👇
 


Direct Link


Free MF Download Link


FoR Online Read

ناول پڑھنے کے بعد ویب کومنٹ بوکس میں اپنا تبصرہ پوسٹ کریں اور بتائیے آپ کو ناول کیسا لگا ۔ شکریہ

Post a Comment

0 Comments