Breaking News

6/recent/ticker-posts

Header Ads Widget

Yehi Meri Zaat E Hayat hai by Nagina Basharat





Yehi Meri Zaat E Hayat hai by Nagina Basharat 

Yehi Meri Zaat E Hayat hai by Nagina Basharat 

Urdu poetry is an ancient tradition. It has many different types. It is considered as an important element of our culture. It is a best way to express feelings of love, pain,anxiety and suffocation.
A poet interprets his inner feelings and condition through his words.
یہی میری ذاتِ حیات ھے

نہ وہ سلسلے نہ وہ شوق ھیں
نہ وہ رابطے نہ وہ طرذ ھیں
نہ ہی خواہشوں كے وہ پھول ھیں
نہ ہی ارضو كے حصول ھیں
نہ طلب ہے نظر كی دید كی
نہ تڑپ ھے تیری چاہ كی

نہ پیار ہے۔۔۔نہ خمار ہے
نہ ہی دل بھی تجھ پہ نہال ہے
سبھی راستوں كے جو پھیر تھے
انھیں ہم نے راہ سے ہٹا دیا
سبھی الجھنوں كو گرا دیا

ہمیں اب پتہ ہے كہہ منزلیں
میرے سامنے ھیں كھڑی كہاں
ہمیں اب پتہ ہے كہہ ارضو
كس دل میں ہے كہاں كس قدر

ہمیں اب نہ منزل كی آس ہے
نہ ہی ارضو كی تلاش ہے
ہمیں جو ملا ہے قبول ہے
اسے اپنا مان كہہ چل دیے

نہ دل میں كوی ملال ہے
نہ ہی لب پہ كوی سوال ہے
كہہ نشانِ منزل تو  اور تھا
توں كس ڈگر پہ چل دیا؟؟

یہ بڑی عجیب سی بات ہے
كہہ تڑپ طلب ہی بدل گئ
نہ یہ پوچھنا۔۔كہہ كیا ہوا
كیوں اپنے ہاتھ سے چھین لیا
میں نے اپنے جینے كا آسرا؟؟؟

فقد اتنا كہنا ہے اب مجھے
كبھی ساحلوں پر بیٹھ كر
بھی منزلوں كی تلاش ہو
اور
سكوں نہ دل كے پاس ہو
تو!!!
ساحلوں كو چھوڑ  دو

یہ جان لو!!!
كہہ سكونِ دل نہیں تیرا۔۔۔۔۔
تیری موج میں كئ بھنور ھیں۔۔۔
تجھے گردشوں كی پیاس ہے۔۔۔۔۔
تجھے ٹھوكروں كی آس ہے۔۔۔۔
تجھے آنسو لانے ہیں آنكھ میں۔۔۔
تجھے غم سے ملنے كی ارضو۔۔۔۔۔
تو!!!!!
فقد اسی تلاش میں
تم ساحلوں كو چھوڑ دو

یہی میری ذاتِ حیات ہے
جہاں سلسلے ۔۔۔نہ وہ شوق ہیں
نہ وہ رابطے۔۔۔۔ نہ وہ  طرز ہیں

نگینہ بشارت رایٹز📝

Post a comment

0 Comments