Breaking News

6/recent/ticker-posts

Header Ads Widget

Roshni ki baat karte ho written by Sofia Mehar

Roshni ki baat karte ho written by Sofia Mehar 

Roshni ki baat karte ho written by Sofia Mehar 

روشنی کی بات کرتے ہو ۔۔
اندھیرا مٹانے والا کوئی کام تو کر ۔۔۔۔
ملتا نہیں رب صرف مسجد میں جانے سے ۔۔
تو رات کا پچھلا پہر اس کے نام تو کر ۔۔۔۔
بار بار پروانے کی مثال دیتے ہو ۔۔۔
جس پہ آ کہ جل جائیں پروانے ۔۔۔
ایسی کوئی شمع تو بن ۔۔۔
مانا کہ تاریکی مٹا دیتی ہے اک روشنی کی چھوٹی سی لکیر ۔۔۔
مگر صوفیہ تو ،تو اک چھوٹا سا چراغ ہے اس سے کیا ہو گی بزم روشن ۔۔۔۔۔۔؟؟؟؟؟

(صوفیہ مہر )




Post a comment

0 Comments